بدھ 22 جنوری 2020ء
بدھ 22 جنوری 2020ء

اہم خبریں

CMPAKچین اور پاکستان کے مابین ٹیلی مواصلات کے بڑے منصوبوں میں سے ایک ہے: چائنیز سفیر کازونگ 4جی کی سالانہ بزنس کانفرنس سے خطاب

ٓٓاسلام آباد(پ ر) پاکستان میں ٹیلی مواصلات کے سب سے بڑ ے نیٹ ورک زونگ4جی نے اپنی سالانہ بزنس کانفرنس کا انعقادکیا جس کا عنوان" ون ( جیتو)2020۔ اگلی دہائی میں سپیڈ مع ڈیجیٹل لیڈر شپـ" رکھا گیاجس کا مقصد 2019میں حاصل کردہ کامیابیوں کو یادگاربنانا اور 2020کیلئے حکمت عملی کا ترتیب دینا ہے ۔عزت مآب جناب یاو جنگ، پاکستان میں چائنیز سفیر اور زونگ4جی کی انتظامیہ اور ملازمین نے شرکت کی۔زونگ4جی کے چیئر مین اورسی ای او جناب وانگ ہوانے صنعت میں اپنی سبقت کو برقرار رکھنے اور سال بھر میں کمپنی کی غیر معمولی شرح نمو کے حصول googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); کو اجاگر کیا۔ انہوں نے اس کامیابی کو نیٹ ورک کو بڑے پیمانے پر وسعت دینے اور ڈیٹا بزنس کے زبردست نتائج سے منصوب کیا اور مزید بتایا کہ ان اقدامات نے صارفین کی تعداد کو36ملین تک پہنچانے میں اہم کردار ادا کیا۔اسی موقع پر عزت مآب جناب یاو جنگ نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ چائنہ اپنے برادر ملک پاکستان کی معاشی ترقی کیلئے اپنا مثبت کردار ہمہ وقت ادا کرتا رہیگا۔ زونگ4جی CPECکے تحت ٹیلی مواصلات کے بڑے منصوبوں میں سے ایک ہے اورCPECپراجیکٹ کے تحت رابطوں کا شراکت دار ہے۔ چائنہ موبائل پاکستان ملک میں ڈیجیٹل ایکو سسٹم کیلئے بہت اہم پارٹنر ہے اور اپنی مسلسل سرمایہ کاری کی بدولت ملک میں ٹیلی مواصلات کے انفراسٹرکچر کی ترقی کیلئے ، صنعت کی بہتری اور ملکی ترقی کیلئے اپنا کردار ادا کرتا رہیگا۔2020کیلئے اپنی تیاری کے متعلق بتاتے ہوئے جناب وانگ ہوا نے کہا کہ اس ڈیجیٹل کے دور میں زونگ4جی نے ایک مرتبہ پھر اپنی پوذیشن کو مستحکم کر دیا ہے۔قوم کا سب سے بڑا 4جی کیئرئیر قوم کا سب سے تیز ترین ڈیٹا نیٹ ورک کا حامل ہے۔ کچھ ہی سالوں میں ہم نے دیکھا کہ زونگ 4جی نے ملک کے طول و عرض میں اپنا نیٹ ورک قائم کر لیا۔ اضافی 4جی کے نقش قدم اور صارفین کیلئے بہترین خدمات کی فراہمی نے اس بات کو ثابت کر دیا کہ زونگ 4جی ہی ملک کا بہترین اور وسیع تر نیٹ ورک ہے۔کانفرنس میں کمپنی کی حاصل کردہ کامیابیوں پر روشنی ڈالی گئی، اور سینئر ممبران 2019میں تکمیل شدہ کارناموں کا خاکہ پیش کرنے کے بعد 2020کیلئے اپنی حکمت عملی کو واضع کیا۔اپنی وسعت اور کسٹمر سنٹرک ہونے کی بدولت زونگ4جی پرعزم ہے کہ ٹیلی مواصلات کی صنعت میں اپنے نمبر1ہونے کی پوذیشن کو برقرار رکھتے ہوئے پاکستانیوں کو بہترین خدمات اور مصنوعات کی فراہمی اور ملک کی ترقی کیلئے ہمہ وقت اپنی کردار ادا کرتا رہیگا۔زونگ4جی کے متعلق معلومات:زونگ 4 جی ، چائنہ موبائل پاکستان (سی ایم پاک) چائنہ موبائل کمیونیکیشن کارپوریشن کا 100فیصد ملکیت کا ماتحت ادارہ ہے۔ زونگ 4 جی ملک میں فور جی کا سب سے بڑا سبسکرائبر بیس کا حامل ہے سب سے وسیع 4Gکوریج کا اعزاز بھی اسی کو حاصل ہے۔ زونگ4جی 14ملین سبسکرائبرز اور 12ہزار500سے زائد 4جی سائیٹس کا حامل سب سے وسیع اور مربطوط نیٹ ورک ہے۔

پاکستان

آٹا بلیک میں فروخت ہونےلگا گھنائونےکاروبار میں کون ملوث نکلا؟ایکشن لے لیا گیا

پشاور(این این آئی)ضلعی انتظامیہ پشاور نے کاروائی کر تے ہوئے پشاور میں دوفلور ملز کو سرکاری آٹے کو بلیک میں فروخت کرنے پر سیل کر کے سرکاری گندم کا کوٹہ منسوخ کر دیا۔ اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر (شاہ عالم)ڈاکٹر احتشام الحق نے بڈھنی روڈ پر مختلف فلور ملز کا معائنہ کیا۔ کاروائی کے دوران دوفلورملز میں سرکاری آٹے کو بلیک میں فروخت کر نے پر سیل کر کے ان کا سرکاری کوٹہ منسوخ کر دیا۔ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کے مطابق ان کو اطلاع ملی تھی کہ چند ملیں googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); سرکاری آٹے کو بلیک میں فروخت کر رہی ہیں جس پر کاروائی کر کے ان ملوں کو سیل کر دیا گیا جبکہ ان کا سرکاری گندم کا کوٹہ بھی منسوخ کر دیا گیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ افسران کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پشاور کی تمام فلور ملز کا روزانہ کی بنیاد پر معائنہ کریں اور اگر کوئی سرکاری آٹے کو بلیک میں فروخت کرتے ہوئے پایا جائے تو اس کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے۔‎

انٹرنیشنل

ٹرمپ نے اپنے اوپر تنقید کرنے والوں کو ماحولیاتی’ عذاب کا پیغمبر‘ قرار دے دیا

ڈیووس( آن لائن )امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سوئٹزرلینڈ کے شہر ڈیوس میں جاری عالمی اقتصادی فورم کے اجلاس کے دوران اپنی تقریر میں موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے حکومتوں کی کارکردگی پر تنقید کرنے والوں کو ماحولیاتی ’’عذاب کے پیغمبر‘‘قرار دیا۔ ڈونلڈ ٹرمپ نے ناقدین کے لیے ان الفاظ کا استعمال سویڈن کی نوجوان ماحولیاتی مہم جو گریتا تھونبرگ کی موسمیاتی تبدیلی کے بحران پرحکومت کی عدم توجہی کے حوالے سے تنقید کے بعد کیا۔امریکی سینیٹ میں مواخذے کی کارروائی شروع ہونے والے قبل ڈونلڈ ٹرمپ نے ڈیوس میں سخت تقریر کی جہاں گریتا تھونبرگ بھی ہال میں موجود googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); سامعین میں شامل تھیں۔ٹرمپ کا کہنا تھا کہ ‘ہمیں رنگ بدلتے عذاب کے پیغمبروں اور ان کی الہامی پیش گوئیوں کو مسترد کرنا چاہیے’۔عالمی اقتصادی فورم کا 50 واں سالانہ اجلاس اسکی ریزورٹ میں ہوا جہاں موسمیاتی تبدیلی پر توجہ مرکوز کی گئی لیکن اس حوالے سے عالمی سطح پر مختلف آرا پائی گئیں۔امریکی صدر نے اس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ‘ڈیوس کا دورہ اجلاس کے حوالے سے تھا جہاں دنیا کے اہم ترین شخصیات اور ہم شان دار کام کے بعد واپس جارہے ہیں’۔مواخذے کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ ‘یہ شرم ناک ہے اور صرف دھوکا ہے’۔گریتا نے ٹرمپ سے قبل اپنے پیغام میں موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ موسمیاتی تبدیلی سے لڑنے کے لیے ‘بنیادی طور پر کچھ نہیں کیا گیا’۔17 سالہ رضاکار کا کہنا تھا کہ ‘اس معاملے پر اس سے کہیں زیادہ توجہ کی ضرورت ہے اور یہ محض ابتدا ہے’۔انہوں نے تسلیم کیا کہ موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے میری مہم کو اب تک بغیر کسی تبدیلی کے بڑے پیمانے پر توجہ حاصل ہوئی۔ڈیوس میں جہاں دنیا بھر سے آئے ہوئے رہنماو اپنے ملکوں میں موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے حکومتوں کیکارکردگی اور اصلاحات کو اجاگر کر رہے ہیں وہیں ایک نئی رپورٹ سامنے آئی ہے کہ 2016 میں پیرس معاہدے کے بعد دنیا کے چند بڑے بینکوں، انشورنس فراہم کرنیوالے اور پنشن فنڈز کے اداروں نے خام ایندھن کی کمپنیوں میں مشترکہ طور پر 1.4 کھرب ڈالر کی سرمایہ کاری کر رکھی ہے۔ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنی تقریر میں امریکی معیشت کی کامیابیوں کی ایک لمبی فہرست دہرائی اور کہا کہامریکا قدرتی گیس اور تیل پیدا کرنے والا پہلا ملک ہے۔یاد رہے کہ گریتا نے گزشتہ برس منعقدہ عالمی اقتصادی فورم کے اجلاس میں موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے ایک جذباتی تقریر کی تھی جس کے بعد انہیں عالمی سطح پر پذیرائی ملی تھی۔گریتا کو اس تقریر کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ کی آمد پر سیکیورٹی اہلکاروں نے ہال سے باہر نکال دیا تھا جس کی ویڈیو وائرل ہوئی تھی۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں