جمعه 15 نومبر 2019ء
جمعه 15 نومبر 2019ء

پی سی بی کی جانب سے سرفراز کو کپتانی سے ہٹائے جانے کے اعلان کے فوری بعد نیا تنازعہ کھڑا ہوگیا، پی سی بی نے معذرت کرلی

اسلام آباد(این این آئی)پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹائے جانے کے اعلان کے فوری بعد ایک ٹوئٹ سے بورڈ تنقید کی زد میں آگیا۔تفصیلات کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ نے سرفراز احمد کو تینوں فارمیٹ کی کپتانی سے ہٹادیا ہے جس کے بعد اظہر علی ایک بار پھر ٹیسٹ فارمیٹ کے کپتان مقرر کیے گئے ہیں، بابراعظم کو ٹی ٹوئنٹی کی کپتانی سونپی گئی ہے تاہم بورڈ نے ابھی ون ڈے کی ٹیم کے کپتان کا اعلان نہیں کیا۔سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹائے جانے کے اعلان کے تھوڑی دیر بعد پاکستان کرکٹ بورڈ googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); کے آفیشل ٹوئٹر اکاؤنٹ سے ایک ٹوئٹ کی گئی جس میں شامل ایک جِف ویڈیو میں کھلاڑیوں کو خوشیاں مناتے دِکھایا گیا جبکہ اس موقع پر سرفراز احمد بھی ویڈیو میں موجود ہیں جنہیں ٹریننگ سیشن کے دوران ٹیم کا ایک ممبر باہر جانے کا اشارہ کررہا ہے۔پی سی بی کی جانب سے سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹانے کے موقع پر ویڈیو جاری کرنے سے تاثر پیدا ہوا کہ کھلاڑی سرفراز کے جانے کی وجہ سے خوشیاں منارہے ہیں اور ٹیم کا ایک ممبر انہیں باہر جانے کو کہہ رہا ہے۔پاکستان کرکٹ بورڈ کی اس ٹوئٹ پر کرکٹ کے شائقین نے بورڈ پر تنقید کی اور اسے نامناسب قرار دیا۔ٹوئٹر صارفین کی جانب سے پی سی بی پر تنقید کے بعد بورڈ نے اس ویڈیو کو ٹوئٹر اکاؤنٹ سے ہٹادیا۔اس حوالے سے رابطہ کرنے پر پی سی بی حکام کا کہنا تھا کہ یہ ایک غلطی ہے لیکن اس کا مقصد کسی کی دل آزاری کرنا نہیں تھا۔پی سی بی حکام نے ٹوئٹ پر معذرت کرتے ہوئے کہا کہ ایک سال بعد ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ کا آغاز ہوگا جس کے لیے ٹکٹوں کی فروخت شروع ہوئی ہے، اسی حوالے سے تمام کرکٹ بورڈز نے ویڈیو جاری کرنے کا فیصلہ کیا تھا البتہ پی سی بی کی جانب سے ویڈیو کی شیئرنگ اور سرفراز کو کپتانی سے ہٹائے جانے کے ٹائمنگ میچ ہونے سے غلط تاثر پیدا ہو۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں