منگل 23 جولائی 2019ء
منگل 23 جولائی 2019ء

مسلمان لڑکے سے میرے دوستی کیسے محبت میں تبدیل ہوئی اورمیرے فیملی روحیل امین کو کیوں قبول نہیں کر رہی ؟ دوستی کرنے پر میرے ساتھ کیا سلوک کیا جا

ممبئی (این این آئی)بالی ووڈ کے معروف ہدایتکار راکیش روشن کی بیٹی سونینا روشن نے کہا ہے کہ میرے والد نے مسلمان لڑکے سے دوستی رکھنے پر مجھے مارا پیٹا ہے۔میری فیملی روحیل امین کو صرف اس لیے قبول نہیں کررہی کہ وہ مسلمان ہے۔سونینا روشن نے ویب سائٹ کو انٹرویو میں کہا کہ گزشتہ برس فیس بْک پر صحافی روحیل امین سے میری دوستی ہوئی جو محبت میں بدل گئی لیکن میرے والد راکیش روشن مذہب کی بنیاد پر اس تعلق کے خلاف سماج کی دیوار بنے ہوئے ہیں۔ریتک روشن کی بہن سونینا روشن نے کہا ہے کہ میرے googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); گھر والوں نے میری زندگی کو جہنم بنا دیا ہے اور میں ناقابل برداشت صورتحال میں زندگی گزار رہی ہوں، ریتک والد کے سامنے بے بس ہے کچھ نہیں کرسکتا اس لیے اداکارہ کنگنا رناوت سے مدد مانگی ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ میرے والد مجھ پر تشدد کر رہے ہیں اور کہتے ہیں کہ وہ دہشت گرد ہے جبکہ روحیل امین ایسا نہیں ہے۔سونینا روشن نے انکشاف کیا کہ میں نے اداکارہ کنگنا رناوت اور رنگولی چنڈل سے کہا ہے کہ وہ مجھے انصاف دلانے میں مدد فراہم کریں۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں