جمعرات 14 نومبر 2019ء
جمعرات 14 نومبر 2019ء

سعودی عرب میں جلد پیٹریاٹ میزائل بیٹری اور راڈار سسٹم کی تنصیب کی جائے گی

ریاض(آن لائن) سعودی ویب سائٹ سبق کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ سعودی عرب میں جلد پیٹریاٹ بیٹری اور راڈار سسٹم کی تنصیب کر دی جائے گی۔ اس کے علاوہ امریکا کی جانب سے سعودی مملکت میں مزید 200 فوجی بھی جلد تعینات کر دیئے جائیں گے۔ سبق ویب سائٹ کیجانب سے یہ دعویٰ پینٹاگون سے جاری ہونے والے اعلامیے کی روشنی میں کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اور امریکی وزیر دفاع مائیک ایسپر کے درمیان ٹیلی فونک رابطہ ہوا ہے جس کے بعد امریکی وزارت دفاع نے googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); فیصلہ کیا ہے کہ امریکا کی جانب سے جلد ہی سعوی عرب میں پیٹریاٹ بیٹری اور 4 راڈار سسٹم نصب کیے جائیں گے اور مزید 200 امریکی فوجی بھی بھیجے جا رہے ہیں۔پیٹریاٹ میزائلوں کی اضافی بیٹریوں کے علاوہ اعلیٰ درجے کا ڈیفنس سسٹم بھی شامل ہوگا۔اس میں ’ تھاڈ ‘میزائل سسٹم کا بھی بھی امکان ہے۔امریکی وزیر دفاع نے اس موقع پر اطمینان دلایا کہ سعودی عرب کو خود کے دفاع کے لیے جو مدد درکار ہوگی امریکہ اسے وہ مدد پیش کرے گا۔ پینٹا گون کے اعلامیے کے مطابق 14ستمبر 2019ءکو سعودی تیل تنصیبات پر ہونے والے میزائل حملوں کے بعد امریکا کی جانب سے سعودی عرب کے دفاعی نظام کو مضبوط بنانے کے لیے مزید اقدامات کیے جار ہے ہیں۔جبکہ بحرانی صورتِ حال جنم لینے پر سعودی مملکت میں مزید امریکی فوج بھیجے جانے کے لیے بھی تیاریاں مکمل ہیں۔امریکی وزیر دفاع نے یہ بھی کہا کہ ایران خطے کے امن کو عدم استحکام کرنے کی جن کوششوں میں لگا ہوا ہے۔ اس کی جارحانہ پالیسی آگے اب بند باندھنا پڑے گا۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں