جمعرات 06  اگست 2020ء
جمعرات 06  اگست 2020ء

کوئی ایک ادارہ بتادیں جس میں کسی وزیراعظم کو بلا کر احتساب کرنے کی جرات ہو،خواجہ سعد رفیق کے بیان پر عدالت برہم

لاہور (این این آئی) احتساب عدالت نے پیراگون اسکینڈل میں ایم ایس سروسز ہسپتال کو وعدہ معاف گواہ کا طبی معائنہ کر کے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔ دوران سماعت خواجہ سعد رفیق کے بیان پر نیب پراسیکیوٹر کی تلخ کلامی بھی ہوئی۔پیراگون اسکینڈل کیس میں (ن)لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق اور سلمان رفیق احتساب عدالت کے جج جواد الحسن کے روبرو پیش ہوئے جبکہ عدالتی حکم پر وعدہ معاف گواہ قیصر امین بٹ کوایمبولینس کے ذریعے پیش کیا گیا۔ ملک کاشف شہباز ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے اور میڈیکل رپورٹ پیش کرتے ہوئے قیصر امین بٹ کے googletag.cmd.push(function() { googletag.display('div-gpt-ad-1557484938290-0'); }); googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); وارنٹ گرفتاری معطل کرنے کی درخواست دائر کردی۔عدالتی استفسار پر نیب پراسیکیوٹر نے بتایا کہ گواہ قیصر امین بٹ احاطہ عدالت میں موجود ہے مگر بیان دینے کے قابل نہیں۔ قیصر امین بٹ کی صحت کے پیش نظر عدالت جو حکم جاری کرے گی، اس پر عمل کریں گے۔نیب پراسیکیوٹر نے جوڈیشل مجسٹریٹ ذوالفقار باری سمیت گواہوں کے بیان پر جرح کرنے کی استدعا کی جبکہ خواجہ برادران کے وکلا کی جانب سے کیس ملتوی کرنے کی استدعا کی گئی جس پر عدالت نے اظہار برہمی کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ گواہوں پر جرح آج ہی ہوگی۔عدالتی استفسار پر وکلا نے بتایا کہ امجد پرویز ہائیکورٹ میں مصروف ہیں اور اشتر اوصاف بھی آج موجود نہیں۔خواجہ سعد رفیق نے عدالت میں بیان دیا کہ ہمارے خلاف جھوٹا کیس بنایا گیا۔ نیب نے ہمارے ساتھ بہت زیادتی کی ہے۔ جس پر نیب پراسیکیوٹر نے جواب دیا کہ پورے پاکستان میں صرف نیب ہی غلط کررہا ہے، باقی تو سب ٹھیک ہیں۔ کوئی ایک ادارہ بتادیں جس میں کسی وزیراعظم کو بلا کر احتساب کرنے کی جرات ہو۔عدالت نے گواہ قیصر امین بٹ اور خواجہ برادران کو حاضری لگانے کے بعد جانے کا حکم دیتے ہوئے سماعت 19 اگست تک ملتوی کردی۔ عدالت نے سروسز ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کو گواہ قیصر امین بٹ کا طبی معائنہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے رپورٹ بھی طلب کرلی۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں