منگل 18 جون 2019ء
منگل 18 جون 2019ء

نیشنل سکیورٹی ایڈوائزر کا عہدہ ختم، وزیراعظم عمران خان کا عسکری قیادت سے براہ راست بات کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) حکومت نے قومی سلامتی کے مشیر(نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر) کا عہدہ ختم کردیا ہے اور اب بھارت کے ساتھ قومی سلامتی کی سطح کے معاملات کے لیے دیگر سفارتی ذرائع(چینلز) کا استعمال کیا جائے گا۔ذرائع کے مطابق مشیر قومی سلامتی کے ساتھ 27 رکنی افسران کی ٹیم کام کر رہی تھی جس کو اب دیگر محکموں میں منتقل کیا جائے گا۔ اطلاعات ہیں کہ حکومت ناصر جنجوعہ کے عہدے پر کوئی نئی تعیناتی کرنا نہیں چاہتی۔سابق وزیراعظم نواز شریف نے ناصر جنجوعہ کو قومی سلامتی کا مشیر مقرر کیا تھا جو گزشتہ برس ن لیگ کی مدت حکومتختم ہونے پر اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے تھے۔ ان کے بعد مشیر قومی سلامتی کا عہدہ خالی تھا۔ناصر خان جنجوعہ کو 2015 میں قومی سلامتی کا مشیر مقرر کیا گیا تھا۔ ناصر جنجوعہ سے قبل مذکورہ عہدہ سرتاج عزیز کے پاس تھا جو کہ خارجہ امور کے مشیر بھی تھے۔ اس حوالے سے سینئر صحافی ڈاکٹر شاہد مسعود نے ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں کہا کہ وزیراعظم اب عسکری قیادت سے براہ راست بات کیا کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ درمیان میں کوئی نہیں ہوا کرے گا، قومی سلامتی کے اجلاس میں جہاں سب ہوتے ہیں بات کرنا بھی مناسب نہیں ہو تا تھا۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں