پیر 25 مئی 2020ء
پیر 25 مئی 2020ء

اسرائیلی انتہا پسندوں کی مجرمانہ لا پرواہی نے انہیں کرونا کی مصیبت میں ڈال دیا

تل ابیب (این این آئی )اسرائیل میں انتہا پسند آرتھوڈوکس اور بنیاد پرست صہیونیوں کی طرف سے کرونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر حکومتی احکامات نظر انداز کرنے کے نتیجے میں اس وقت اسرائیل ایک نئی مشکل سے دوچار ہوچکا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق گذشتہ ہفتے کے اوائل میں وسطی اسرائیل کے شہر بنی براک کی سڑکوں اور بازاروں میں خریداروں کا ہجوم تھا۔ ان میں سے بیشتربنیاد پرست آرتھوڈوکس یہودی تھے جو اپنے مذہبی رہ نماؤں کی فرمانبرداری کرتے ہوئے کرونا وائرس کے خطرے کے حوالے سے حکومتی اقدامات اور ہدایات کو نظر انداز کرتے ہوئے سڑکوں googletag.pubads().definePassback('/1001388/JW_JavedCh', [1, 1]).display(); اور بازاروں میں گھوم رہے تھے۔اسرائیلی عہدیداروں کا کہنا تھا کہ ملک میں کرونا کی وباء پھیلنے کی ایک وجہ مذہبی رہ نمائوں کی اندھی تقلید اور جدید ریاستی اصولوں سے انحراف بھی شامل ہے۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں