منگل 18 جون 2019ء
منگل 18 جون 2019ء

بعض عناصر ملکی معیشت کو گھن کی طرح سے چاٹ رہے ہیں، چیئرمین پاکستان شپ ایجنٹس ایسوسی ایشن

کراچی(این این آئی)چیئرمین پاکستان شپ ایجنٹس ایسوسی ایشن (پی ایس اے اے)اور سابق نائب صدرایف پی سی سی آئی ،میری ٹائم سیکٹر کی معروف شخصیت طارق حلیم نے کہا ہے کہ اسمگلنگ،اوورانوائسنگ ،انڈر انوائسنگ اورمس ڈیکلریشن کے خلاف بھرپورکاروائی ہونی چاہیئے،پاکستانی معیشت کوبہت سے چیلنجز درپیش ہیں،معاشی ترقی اور بحالی کے لئے وزیراعظم عمران خان زبردست کوششوں میں مصروف ہیں۔اور اس سلسلے میں مسلسل اقدامات بھی اٹھائے جارہے ہیں،وزیرخزانہ اسد عمر کی تبدیلی اور مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ کی تقرری اسی سلسلہ کی ایک کڑی ہے جبکہ نئے چیئرمین محمدشبر زیدی کی تعیناتی اور پنجاب میں ڈاکٹر سلمان شاہ کی تقرری بھی اسی حوالے سے کی گئی ہے لیکن بعض عناصر ملک میں ایسے ہیں جو ملکی معیشت کو گھن کی طرح سے چاٹ رہے ہیںاور ملکی بقاء کیلئے ایسے عناصر کے خلاف کاروائی ضروری ہے۔ طارق حلیم نے کہا کہ چیئرمین ایف بی آر شبرزیدی اسمگلنگ، اوورانوائسنگ ،انڈر انوائسنگ اورمس ڈیکلریشن کے خاتمے کیلئے اسپیشل ٹاسک فورس تشکیل دیں تاکہ سرکاری اداروں میں موجود کالی بھیڑوں کے تعاون سے کھیلے جانے والے گھنائونے کھیل کے خلاف ایکشن لیا جائے۔ چیئرمین پاکستان شپ ایجنٹس ایسوسی ایشن نے چیئرمین ایف بی آر شبرزیدی کی تقرری کے حوالے سے مبارکباد کیلئے لکھے گئے ایک خط میں یہ کہا ہے کہ کسٹمز انٹیلی جنس،ایف آئی اے ، بارڈراتھارٹیز،وزارت داخلہ کے اراکین پر مشتمل جے ا ٓئی ٹی بنائی جائے،یہ جے آئی ٹی اپنی انکوائری مکمل کرکے رپور ٹ مرتب وزیر اعظم عمران خان کو پیش کریے تاکہ ملک کیلئے ناسور اسمگلنگ،اوور،انڈرانوائسنگ اور مس ڈیکلریشن کا خاتمہ ہوسکے اور جن اداروں اورافراد کے خلاف پہلے ہی ایف آئی آر ودیگرشکایات درج ہیں انہیں کیفرکردارتک پہنچایا جائے۔انہوں نے مزید کہا کہ پاک چین تجارت میں تقریباً 6ارب ڈالر کی مس ڈیکلریشن کی اطلاعات ہیں،سال 2014 کے مقابلے میں سال2015کے دوران چین کے ساتھ تجارت میں مس ڈیکلریشن اورانڈرانوائسنگ کی مجموعی مالیت ایک ارب86کروڑڈالر کا اضافہ ہواتھا،سب سے زیادہ مس ڈیلریشن الیکٹریکل اور الیکٹرانکس آلات ،مشینری،نیوکلیئر ری ایکٹر،بوائلرز اور مین میڈ فلامنٹس کیدرآمد میں کی جاتی رہی ہے جبکہ آئرن اینڈ اسٹیل،پلاسٹک آئٹمز،مین میڈ اسٹیپل فائبر،گاڑیوں اور پرزہ جات میں بھی مس ڈیکلریشن بڑھ رہی ہے۔طارق حلیم نے کہا کہ یہ انتہائی سنجیدہ مسئلہ ہے ،اسمگلنگ،اوور،انڈرانوائسنگ اور مس ڈیکلریشن کے خلاف بھرپور کاروائی ہونی چاہیئے،مجھے امید ہے کہ چیئرمینایف بی آر شبرزیدی اس کے تدارک کیلئے خاطرخواہ اقدامات اٹھائے جائیں۔ چیئرمین پاکستان شپ ایجنٹس ایسوسی ایشن نے کہا کہ صنعتی وتجارتی معاملات میں سرکاری خزانے کو نقصان پہنچانا قابل معامی نہیں بلکہ اس کے خلاف بھرپورمہم چلنی چاہیئے اور ان کے خلاف قرارواقعی کاروائی عمل میں لائی جائے۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں